ساہیوال، بلدیہ نے سیوریج ٹیکس میں ہزار گنا اضافہ کر دیا

ساہیوال(بیورورپورٹ)میونسپل کارپوریشن نے ہاؤس کی منظوری کے بغیر سیوریج ٹیکس میں ایک ہزارگنا سے زائد اضافہ کرکے شہریوں کووصولی نوٹس بھجوادیئے‘ شہری پریشان‘ شہریوں کاشدید احتجاج‘ یوسی چیئرمین مداخلت کریں بصورت دیگراحتجاج کرینگے‘ظالمانہ ٹیکس واپس لیاجائے‘شہریوں کا مطالبہ۔تفصیلات کے مطابق مطابق میونسپل کارپوریشن کے اجلاس میں 3/4 ماہ قبل سیوریج ٹیکس میں ہزارگنا سے زائد اضافہ سمیت دیگرٹیکسوں میں اضافے کی منظوری کے لئے قراردادپیش کی گئی توہاؤس نے منظوری نہ دیتے اگلے اجلاس میں بحث کافیصلہ کیا جس کے بعد اگلے دوتین اجلاسوں میں بحث نہ ہوئی اورگذشتہ ماہ ہونے والے اجلاس میں دوبارہ ٹیکسوں کے بارے میں بحث ہوئی توٹیکسوں میں اضافہ سے متعلق اخبارات میں اشتہارات شائع کرکے تجاویز لینے اور تاجروں کواعتماد میں لینے اور اعتراضات لینے کافیصلہ ہوا لیکن اس کے باوجود کارپوریشن افسران نے شہریوں کوہزارگنا سے زائد اضافہ کرکے 500 روپے سے 6ہزارروپے کی وصولی کے لئے نوٹسز بھجوادیئے ہیں جس پرشہریوں نے شدید احتجاج کیاہے۔ شہریوں نے اس بارے میں یوسی چیئرمینوں کومداخلت کرنے اورمیئر ساہیوال سے ظالمانہ ٹیکس کوفوری واپس لینے کامطالبہ کیاہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں