اسلام آباد، آتشزدگی ، 2 جاں بحق، سی پیک کے 648 ملین ڈالر کے منصوبے کا ریکارڈ راکھ

اسلام آباد (نیٹ نیوز)اسلام آباد میں ریڈ زون میں واقع عوامی مرکز میں لگ گئی ، جان بچانے کی کوشش میں چھلانگ لگانے والے 2زخمی ہسپتال میں دم توڑ گئے ،ذرائع کے مطابق آگ سافٹ ویئر ٹیکنالوجی کی ایک عمارت کے گراﺅنڈ فلورمیں وفاقی محتسب کے آفس میں لگی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے پوری عمارت کو اپنی لپیٹ میں لے لیا، آتشزدگی سے ادارے کا قیمتی ریکارڈ بھی جل گیا،آگ بجھانے کے لیے فائر بریگیڈ گاڑیوں عوامی مرکز پہنچ گئیں، واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ضلعی انتظامیہ کے حکام بھی موقع پرپہنچ گئے۔ ریسکیو حکام کے مطابق عمارت سے چھلانگ لگانے والے علی رضا اور عمر نامی نوجوان زخموں کی تاب نہ ہوتے ہوئے ہسپتال میں چل بسے جب کہ ایک زخمی ہسپتال میں زیر علاج ہے. آگ پر قابو پانے کی کوششیں جاری ہیں۔ ذرائع کے مطابق عمارت میں سی پیک سنٹر آف ایکسیلینس کا دفتر بھی واقع ہے جس میں سی پیک کے 648 ملین ڈالرکے منصوبے کا ریکارڈ موجود تھا. یہ عمارت نئی تعمیر یافتہ تھی اور اس میں پاکستان ایکسپورٹ بورڈ اور دیگر سرکاری دفاتر قائم تھے. وفاقی دارالحکومت میں آگ لگنے کے واقعے کو کرپشن کے ثبوت مٹانے کے سلسلے کی کڑی قرار دیا جا رہا ہے. میڈیا سے وابستہ لوگوں میں چہ مگوئیاں جاری ہیں کہ آگ خود نہیں لگی بلکہ بدعنوانی کے ثبوت مٹانے کے لیے لگائی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں