ساہیوال، جڑی بوٹی مکاؤ مہم کی افتتاحی تقریب

ساہیوال (ایس این این) ڈپٹی کمشنر محمد زمان وٹو نے کہا ہے کہ زرعی پیداوار میں اضافہ کر کے ملک میں غربت کی شرح کم کی جا سکتی ہے کیونکہ ملک 70 فیصد آبادی کا انحصار زرعی شعبے کی آمدنی پر ہے۔کسان فصلوں سے جڑی بوٹیوں کا خاتمہ کر کے اور جدید طریقہ کاشت اپنا کر ہی بہتر پیداوار اور زیادہ آمدنی حاصل کرسکتے ہیں ۔انہوں نے یہ بات محکمہ زراعت کی جڑی بوٹی مکائو مہم کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی جس میں محکمہ زراعت کے افسران ،ملازمین اور کاشتکاروں نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔ڈائریکٹر زراعت محمد فاروق جاوید ،ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت امتیا زاحمد اور ڈپٹی ڈائریکٹرپلانٹ پروٹیکشن رائو محمد اشفاق اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر چوہدری کلیم نثار بھی اس موقع پر موجود تھے ۔انہوں نے محکمہ زراعت پر زور دیا کہ وہ جڑی بوٹیوں کی تلفی کے حوالے سے کسانوں کو گائیڈ کریں اور فیلڈ سٹاف ان سے قریبی رابطہ رکھے تا کہ انہیں مفید مشورے دیے جا سکیں ۔انہوں نے کیڑے مار اور بوٹی تلف کرنیوالی ادویات کے سپرے کم کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا جس کی وجہ سے ماحولیاتی آلودگی میں اضافے کے ساتھ ساتھ کسانوں پر بے جا مالی بوجھ بھی پڑتا ہے۔ڈپٹی کمشنر محمد زمان وٹو نے محکمہ زراعت کے فیلڈ سٹاف کی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ہدایت کی کہ ان کی مسلسل مانیٹرنگ کو یقینی بنایا جائے تا کہ وہ روزانہ کی بنیاد پر کسانوں سے رابطہ رکھیں اور ان کی رہنمائی کریں ۔انہوںنے محکمہ زراعت کو موجودہ شجر کاری مہم کے دوران زیادہ سے زیادہ پودے لگانے کی بھی ہدایت کی اور کہا کہ زمینداروں کو بھی درختوں کے فوائد سے آگاہ کرنے کیلئے خصوصی آگہی مہم شروع کی جائے ۔اس سے پہلے ڈائریکٹر زراعت محمد فاروق جاوید نے کہا کہ محکمہ کسانوں کی رہنمائی اور فصلوں سے زیادہ پیداوار حاصل کرنے کیلئے مفید مشورے دے رہا ہے جس سے نقد آور فصلوں کی پیداوار میں ا ضافہ ہوا ہے ۔انہوںنے کہا کہ مہم کا مقصد فصلوں کو جڑی بوٹی سے پہنچنے والے نقصانات سے کسانوں کو آگاہ کرنے اور ان کے خاتمے کیلئے جدید طریقے بتانا ہے تا کہ کسان اپنی فصلوں سے بھر پور پیداوار حاصل کر سکیں ۔انہوںنے کہا کہ مہم کے دوران فیلڈ سٹاف کسانوں سے خصوصی نشستوں کا اہتمام کرے گا جہاں انہیں اس مہم کے اغراض و مقاصد سے آگاہ کیا جائے گا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں