چاند کا تنازع، خیبر پختونخوا کے شہری پھر دو عیدیں منائیں گے

پشاور(ایس این این) پشاور میں جامع مسجد قاسم کی جانب سے ایک بار پھر چاند کی رویت کے اعلان کے بعد چاند کا تنازع سامنے آیا .سرکاری طور پر چاند نظر نہ آنے کے سرکاری اعلان کے بعد پشاور میں مفتی شہاب الدین پوپلزئی کی سربراہی میں مسجد قاسم علی خان کی غیر سرکاری کمیٹی نے صوبے کے مختلف علاقوں میں چاند نظر آنے کا اعلان کردیا۔چاند نظر آنے کے غیر سرکاری اعلان کے بعد خیبر پختونخوا اور حال ہیں میں اس میں ضم ہونے والے فاٹا کے شہری ایک بار پھر دو عیدیں منائیں گے۔
مسجد قاسم علی خان کی غیر سرکاری کمیٹی ہر سال اجلاس منعقد کرکے اپنے طور پر صوبے بھر سے چاند کی شہادتیں موصول کرتی ہے۔اس سال بھی کمیٹی نے خیبر پختونخوا کے مختلف حصوں سے چاند نظر آنے کی 45 شہادتیں موصول ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے جمعہ کو عیدالفطر منانے کا اعلان کردیا۔
اعلان کے وقت شہریوں کی بڑی تعداد مسجد میں جمع تھی۔مفتی شہاب الدین پوپلزئی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’ہمیں 10 خواتین سمیت چاند نظر آنے کی 45 شہادتیں موصول ہوئیں۔‘ اس لیے کل صوبے بھر میں عید الفطر منائی جائے گی.

اپنا تبصرہ بھیجیں