امریکہ افغانستان میں ناکامی کا اعتراف کرے: روس

اسلام آباد(اے پی پی) افغانستان کے سابق صدر حامد کرزئی نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حالیہ پالیسی بیان پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ افغانستان میں امن و استحکام قائم نہیں ہو گا بلکہ جھڑپوں اور خونریزی میں تیزی آئیگی جبکہ روس نے کہا ہے کہ امریکہ افغانستان میں بری طرح ناکام ہو گیا ہے۔معروف روسی اخبار’ازویستیا‘کے مطابق سابق افغان صدر نے کہا کہ افغانستان میں بدنام زمانہ بلیک واٹر سمیت پرائیویٹ ملٹری کارپوریشن کو استعمال کرنیکا منصوبہ ہے جو افغانستان کی خود مختاری اور آئین کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ روسی صدر کے خصوصی ایلچی برائے افغانستان ضمیر کابلوف نے افغانستان میں امریکی مہم جوئی کو ناکام قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ کو افغانستان سے اپنی فوجیں واپس بلانا چاہیئے۔انہوں نے کہا کہ ماسکو نے کبھی بھی افغانستان سے امریکی فوج کے انخلا پر زور نہیں دیا لیکن اب جیسا کہ واضح ہوچکا ہے کہ امریکہ کچھ کر نہیں سکتا تو اسے افغانستان چھوڑ دینا چاہیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں