ساہیوال: نہم، پرچہ آؤٹ ہونے کی خبروں‌کی تردید

ساہیوال (بیورورپورٹ ) کنٹرولر امتحانات ساہیوال بورڈ قاضی عبدالناصر نے بصیر پور کے امتحانی مرکز میں پیپر آئوٹ ہونے کی خبروں کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ مذکورہ سنٹر میں کوئی پیپر وقت سے پہلے تقسیم نہیں ہو تاہم ایک امیدوار سے امتحانی مرکز کی حدود میں موبائل فون قبضے میں لیا گیا جس کا مقدمہ درج کر کے تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں ۔ ایک پریس ریلیز میں کنٹرولر امتحانات نے بتایا کہ معروضی سوالات کے لیک ہونے کی خبر فوری طور پر چیئرمین بورڈ اور کمشنر ساہیوال ڈویژن علی بہادر قاضی کے نوٹس میں لایا گیا جنہوں نے واقعہ کی مکمل انکوائری کیلئے رکنی کمیٹی تشکیل دے دی ہے جس کی سربراہی اسسٹنٹ کمشنر دیپالپور کریں گے جبکہ ڈی ایس پی دیپالپور اور ممبر بورڈ اکرم خان کمیٹی کے رکن ہوں گے جو پورے واقعہ کی تحقیق کر کے رپورٹ دے گی تا کہ ملوث افراد کے خلاف قانونی کارروائی کی جا سکے ۔کنٹرولر امتحانات قاضی عبدالناصر نے بتایا کہ مذکورہ واقعہ کی نشاندہی کے بعد تمام امتحانی مراکز پر چیکنگ کا عمل سخت کرنے کے ساتھ ساتھ سیکورٹی میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں