ساہیوال: نویں جماعت کے طالب علم کو 25 سال قید کی سزا

ساہیوال(ایس این این)انسداد دہشت گردی ساہیوال کی عدالت نے آٹھ سالہ بچے کے اغوا برائے تاوان کے مقدمہ کا فیصلہ سناتے ہوئے نویں جماعت کے طالبعلم مدثر کو 25سال قید سخت اور جائیداد ضبط کرنے کا حکم سنایا۔عدالت کے جج ملک شبیر حسین اعوان نے مجرم کے باپ حاجی عظیم کو شک کا فائدہ دے کر بری کر دیا،استغاثہ کے مطابق 8جنوری2014کوکوٹ نبی بخش علاقہ تھانہ صدر دیپالپور سے ملزم نے آٹھ سالہ عبدالرحمٰن کو اغوا کر کے 8 لاکھ روپے تاوان طلب کیا تھا اور توان کی ادائیگی پر بچے کو والدین کے حوالے کر دیا تھا .مغوی کے والدین نے شک کی بنا پر ملزم کے والد حاجی عظیم کے خلاف ایف آئی آر درج کروائی تھی. یہ مقدمہ انسداد دہشت گردی کی عدالت کو منتقل کر دیا گیا تھا. عدالت نے آج ملزم مدثر کو 25 سال کی قید سناتے ہوئے جب کہ ثبوت نہ ہونے بنا پر اس کے باپ کو بری کر دیا .

اپنا تبصرہ بھیجیں