ساہیوال: چائلڈ‌پروٹیکشن بیورو اپریل سے کام شروع کرے گا

ساہیوال(بیورورپورٹ)کمشنر ساہیوال ڈویژن علی بہادر قاضی نے کہا ہے کہ ساہیوال میں چائلڈ پروٹیکشن بیورو اپریل سے کام شروع کر دیگا جس میں 200بے گھر اور نادار بچے اور بچیوں کو رہائش اور تعلیم و تربیت فراہم کی جائیگی تا کہ انہیں معاشرے کا کار آمد شہری بنایا جا سکے۔انہوں نے یہ بات بیورو کی زیر تعمیر عمارت کا تفصیلی معائنہ کرتے ہوئے کہی جو تکمیل کے آخری مراحل میں ہے اور اس ماہ کے آخر تک مکمل کر لی جائیگی۔ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ حبیب جیلا نی وینس‘ایکسین بلڈنگ ذوالفقار علی اور ڈسٹرکٹ انچارج چائلڈ پروٹیکشن محمد شفیق رتیال بھی انکے ہمراہ تھے۔انہوں نے ایڈمن بلاک‘اکیڈمک بلاک‘سٹڈی رومز اور لڑکے اور لڑکیوں کے علیحدہ علیحدہ ہاسٹلز میں تعمیراتی کام اور معیاری کا جائزہ لیا اور محکمہ بلڈنگ کو مزید بہتری کیلئے ضروری ہدایات دیں ڈی او شفیق رتیال نے بتایا کہ بیورو میں 18سال تک کے بے گھر اور نادار بچوں کو مفت رہائش،تعلیم اور صحت کی سہولیات فراہم کی جائیں گی اور انکی تفریح اور فنی تربیت کا بھی بندوبست ہو گا۔کمشنر نے پنجاب حکومت کے اس اہم منصوبے کو سراہا اور کہا کہ بے گھر بچوں کی تعلیم و تربیت حکومت کی ذمہ داری ہے اور اس سلسلے میں انتظامیہ بیورو کو تمام ضروری مدد بھی فراہم کرے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں