آرٹس کونسل ساہیوال میں لوک میلہ کا انعقاد

ساہیوال(بیورورپورٹ)ماں بولی دیہاڑ کے سلسلے میں ساہیوال آرٹس کونسل کے زیر اہتمام جناح ہال میں ساہیوال لوک میلہ منعقد کیا گیا جس میں فنکاروں نے رویتی جھومر ڈانس‘لوک گیت اور خاکے پیش کئے۔یہ تقریب آواز سوسائٹی اور پنجاب لوک سجاگ اور کامسیٹ کے تعاون سے منعقد کی گئی جس کے مہمان خصوصی ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ حبیب جیلانی وینس تھے۔اپنے خطاب میں ساہیوال آرٹس کونسل کے ڈائریکٹر ڈاکٹر ریاض ہمدانی‘آواز سوسائٹی کے امتیاز بٹ اور پنجاب لوک سجاگ کے شفیق بٹ نے کہا کہ زندہ معاشرے اپنی ماں بولی کے فروغ کو سب سے زیادہ اہمیت دیتے ہیں اور بچوں کو ان کی مادری زبان میں ابتدائی تعلیم دیکر ان کی بہتر نشووونما ممکن بنائی جا سکتی ہیں۔انہو ں نے عوام پر زور دیا کہ وہ پنجابی زبان کی ترویج میں اپنا کردار ادا کریں اور اپنی ماں بولی پر فخر کرتے ہوئے اس زبان سے جڑی تہذیب کے فروغ میں بھی شریک ہوں۔میلے میں فیاض حسین نے ڈھول پر بھنگڑا پر فارمنس دیکر حاضرین سے داد وصول کی جبکہ عمران اور اس کے ساتھیوں نے بابا بلھے شاہ کے کلام عشق بے پروا پر اور عبدالرحمن نے بانسری پر ہیر سنا کر سماں باند ھ دیا۔تقریب کی خاص بات پاکپتن کے عبدالجبار اور ساتھیو ں کا ڈانڈیا رقص تھا جسے بے حد سراہا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں