اینکر پرسن کو ثبوت فراہم نہ کرنے پر سزا ہو سکتی ہے:سپریم کورٹ

اسلام آباد: زینب قتل کیس کے گرفتار ملزم عمران علی کے بارے میں انکشافات کرنےوالے اینکر ڈاکٹر شاہد مسعود ثبوت نہ پیش کرنے پر سپریم کورٹ کی جانب سے سزا وار ٹھہرائے جا سکتے ہیں. ذرائع کے مطابق ملزم عمران کے 37 اکاونٹس کا دعویٰ کرنے والے اینکر پرسن ثبوت فراہم نہ کرنے پر قانونی بھنور میں پھنس سکتے ہیں. ثبوت کی عدم فراہمی پرانہیں 3قسم کی سزائوں کو سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔سپریم کورٹ میں زینب قتل کیس کے سلسہ میں‌جاری سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کہا کہ اینکر پرسن کو انسداد دہشت گردی قانون ،توہین عدالت اور تعزیرات پاکستان کی دفعہ 193 کے تحت سزا دی جاسکتی ہے۔سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو میں سینئر صحافی حامد میر نے کہا کہ انہوں نے عدالت سے استدعا کی ہے کہ اگر آج اینکر پرسن اپنی غلطی تسلیم کرلیں اور معافی مانگ لیں تو انہیں معاف کردینا چاہیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں