دہشت گردی کا خدشہ،ہائی الرٹ کا نوٹس جاری

لاہور: ملک کے انٹیلی جنس اداروں نے پنجاب بھر کے سکولز اور ہسپتالوں میں ہائی سیکورٹی الرٹ جاری کردیا ہے. خفیہ اداروں کی طرف سے تحریک طالبان پاکستان کے دہشت گردوں کی جانب سے سیکیورٹی فورسز، اسکولوں اور ہسپتالوں کو نشانہ بنا ئے جانے کے خدشات کا اظہار کیا گیا ہے.رپورٹ کے مطابق، یہ معلوم ہوا ہے کہ ٹی ٹی پی دہشت گردی کے سابق ساجنا گروپ نے آرمی یونیفارم حاصل کیے ہیں اور انہیں افغانستان میں تربیت دیکی گئی ہے. آئی جی پنجاب سمیت مختلف اداروں کے سربراہوں کو جاری کردہ خط کے ذریعے ہائی الرٹ رہنے اور حفاظتی اقدامت موثر بنانے کی ہدایت کی گئی ہے.12 دسمبر کو جاری ہونے والا یہ مراسلہ سیکریٹری اعلی ہائی کمیشن کمیشن (پنجاب)، اسکولوں کی تعلیم کے شعبہ سیکرٹری (پنجاب)، تمام ڈویژنل کمشنرز کو بھی بھیجا گیا ہے.مراسلے میں خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ دہشت گردی سیکورٹی اہلکار یونیفارم پہن کر پنجاب میں تعلیمی اداروں، ہسپتالوں، دفاتروں اور ریاستی گاڑیوں کو نشانہ بنا سکتے ہیں.خفیہ اداروں کے مطابق دہشت گرد انتظامی علاقوں، اجتماعات، اسکولوں اور ہسپتالوں کو نشانہ بنا سکتے ہیں.اس ضمن میں تمام اداروں کو سیکیورٹی کی صورت حال تسلی بخش بنانے کی ہدایت کی گئی ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں