معاشرے سے کرپشن کا خاتمہ وقت کی ضرورت ہے: کمشنر

ساہیوال(ایس این این) کمشنر ساہیوال ڈویژن علی بہادر قاضی نے کہا ہے کہ اداروں کی کارکردگی میں کرپشن سب سے بڑی رکاوٹ جسے فوری ختم کیا جانا وقت کی اہم ضرورت ہے -ایمانداری سے فرائض کی ادائیگی سے ہی عوام کے مسائل حل ہونگے اور ملک ترقی کرے گا -انہو ںنے یہ بات اینٹی کرپشن ڈے کے موقع پر ضلع کونسل ہال میں ہونے والے ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہی -جس میں آر پی او طارق رستم چوہان ،ڈپٹی کمشنر شوکت علی کھچی ،ڈی پی او ڈاکٹر عاطف اکرام ،ڈائریکٹر اینٹی کرپشن امتیاز احمد ملک ،ایڈیشنل کمشنر میاں جمیل ،صدر ڈسٹرکٹ بار چوہدری محمد انور ،ڈپٹی ڈائریکٹر ز میاں سرفراز ،افتخار احمد ،اسسٹنٹ ڈائریکٹر ز چوہدری آصف جاوید ،احمد حبیب عرفانی ،پی آئی او ملک دلاور سلطان ڈھکو ،تاجر رہنما مصطفی بھٹی ،صدر یونین احمد گلریز ،وقار احمد طور کے علاوہ دوسرے متعلقہ محکموں کے افسران نے شرکت کی -انہوں نے کہا کہ ترقی یافتہ ملکوں نے اپنے اداروں سے کرپشن ختم کرکے اور ٹرانسپرنسی کو اپنا کر ہی عوام کو ریلیف دیا لیکن اس میں اہم کردار خود عوام نے ادا کیا -ہمیں چاہیے کہ اپنے عوام کو کرپشن کے نقصانات سے آگاہ کریں تا کہ وہ فوری فائدے کے لئے کرپشن کے راستے کو نہ چنیں -انہوں نے محکمہ اینٹی کرپشن کی کارکردگی کو سراہا اور امید ظاہر کی کہ سخت قوانین پر عمل کر کے اداروں سے کرپشن اور بد عنوانی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکا جائے گا -تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آر پی او طارق رستم چوہان نے کہا کہ ہمیں اپنے تعلیمی اداروں میں بھی طلبا وطالبات کو اس نا سور کی سنجیدگی سے آگاہ کرنا چاہیے تا کہ وہ مستقبل میں معاشرے کے اچھے شہری بن سکیں -ڈائریکٹر اینٹی کرپشن امتیاز احمد ملک نے بتایا کہ محکمے نے ساہیوال ڈویژن اس سال 30لاکھ روپے کی براہ راست اور ڈھائی کروڑ روپے کی بلا واسطہ ریکوری کی ہے جو ایک ریکارڈ ہے -انہوں نے معاشرے کے تمام طبقات پر زور دیا کہ وہ کرپشن اور بد عنوانی کے خاتمے میں محکمہ اینٹی کرپشن کا ساتھ دیں تا کہ اداروں کے معاملات میں شفافیت لائی جا سکے اور عوام کو ریلیف ملے –

اپنا تبصرہ بھیجیں