چیف جسٹس ثاقب نثارکالے کوٹ والوں پربرہم ہو گئے

اسلام آباد: چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثارکالے کوٹ والوں پربرہم ہوگئے۔ انھوں نےکہاکہ بعض وکیل اپنی سیاست کےذریعےعدالتوں کوبربادکرنا چاہتے ہیں لیکن یاد رکھیں یہ وہ عدالتیں نہیں جن میں جب چاہا مار پیٹ کرلی۔صدر لاہور ہائی کورٹ بار ملتان بنچ کی اپیل پر سپریم کورٹ میں سماعت کام سے روکنے کیخلاف ہائی کورٹ ملتان بار کی اپیل غیر موثر قرار دیکر خارج کردی گئی۔ لاہور ہائی کورٹ نے شیر زمان کو بطور صدر بار کام سے روک دیا تھا۔
دوران سماعت چیف جسٹس ثاقب نثارکالے کوٹ والوں میں شامل کالی بھیڑوں پر برہم ہوگئے۔ انھوں نےکہاکہ جب بھی مسئلہ حل کی طرف جاتا ہے،ملتان کے وکیل اس میں رخنہ ڈالتے ہیں۔بعض وکیل اپنی سیاست کے ذریعے عدالتوں اور سسٹم کو برباد کرنا چاہتے ہیں۔وکلاء کی روزی روٹی انہی اداروں سے چل رہی ہے۔عدالتوں کی تضحیک برداشت نہیں کی جائے گی۔یہ وہ عدالتیں نہیں جن میں جب چاہا آپ نے مار پیٹ کرلی۔چیف جسٹس نے کہاکہ عدالت کے پاس ہر کسی سے نمٹنے کی طاقت ہے۔نان پروفیشنل لوگوں کو سسٹم برباد نہیں کرنے دینگے ۔چیف جسٹس نےکہاکہ مسئلے کے حل کیلئے ان کی مدد چاہیئے تو ملتان ہائیکورٹ بار کے نمائندے مناسب طریقے سے ملاقات کا وقت لے کر چیمبر میں ملیں ۔ساتھ ہی خبردار کردیا کہ چیف جسٹس آف پاکستان سے ملتے ہوئے کسی بد اخلاقی کی غلطی ہرگز نہ کی جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں