سول ہسپتال ساہیوال ، ناقص دواؤں سے مریضوں کی حالت غیر

ساہیوال(بیورورپورٹ)ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرہسپتال کے ایمر جنسی وارڈ میں استعمال بعض ادویات کے ری ایکشن ہونے سے مریضوں کی حالت غیر‘ مریض دم توڑنے لگے‘ انکوائری کے حکم کے باوجود ٹال مٹول سے کام لیاجانے لگا‘متعلقہ اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کامطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ساہیوال کے ایمر جنسی وارڈ میں مریضوں کو لگنے والے بعض انجکشن وڈرپس کے ری ایکشن سے بعض مریضوں کی حالت غیر ہونے لگی اور بعض اوقات مریض دنیا سے بھی رخصت ہو نے لگے۔ افسوسناک امر ہے کہ ایمر جنسی وارڈ میں کسی سینئر ڈاکٹر کی بجائے ہاؤس جاب کرنے والے ڈاکٹروں کی ڈیوٹی لگا کر کام چلایاجاتاہے۔ ایک شہری محمدیاسین کی درخواست پر سابق کمشنر نے تحقیقات کاحکم دیا۔ درخواست میں کہاگیاہے کہ زبیدہ بی بی کی انجکشن لگنے کے بعد حالت غیر ہوئی اوروہ چل بسی جس کے بارے میں ایمر جنسی ڈاکٹر نے بھی میڈیسن کے ری ایکشن ہونے کو تحریری تسلیم کیا۔ قبل ازیں بھی نائلہ ریاض کی بھی میڈیسن ری ایکشن سے حالت غیرہوئی جبکہ ہسپتال میں استعمال بعض ادویات غیر معروف کمپنیوں کی ہیں جو شہر کے کسی میڈیکل سٹور ز سے نہیں ملتیں۔ شہری نے الزام عائدکیاہے کہ کمشنر کے حکم پر انکوائری کرنے والا آفیسر ذمہ داروں کو بچانے میں مصروف ہے۔ انہوں نے متعلقہ اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیاہے کہ ڈی ایچ کیو ہسپتال میں استعمال ہونے والی بعض غیر معیاری ادویات کا نوٹس لیکر مریضوں کی جان بچائی جائے اور ذمہ داروں کے خلاف ایکشن لیاجائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں