سکولوں کی تعمیر میں ناقص اینٹوں کا استعمال، کمشنر کا نوٹس

ساہیوال(بیورورپورٹ)کمشنر ساہیوال ڈویژن علی بہادر قاضی نے سکولو ں میں تعمیرکیے جانے والے اضافی کمرو ں میں ناقص اینٹوں کے استعمال کا سخت نوٹس لیا ہے اور اینٹوں کی کوالٹی چیک کرنے کیلئے مشترکہ ٹیمیں تشکیل دینے کی ہدایت کی ہے ۔وہ یہاں اپنے دفتر میں سکولوں میں اضافی کلاس رومز کی تعمیر کے پروگرام سے متعلقہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے جس میں تینوں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز اور محکمہ بلڈنگ کے افسران نے شرکت کی۔انہوں نے ناقص کوالٹی کی شکایات پر نا پسندیدگی کا اظہار کیا اور اینٹو ں کی کوالٹی کو فوری چیک کرنے کے احکامات جاری کرتے ہوئے ہدایت کی کہ اینٹیں انہی بھٹو ں سے خریدی جائیں جنہیں متعلقہ ڈپٹی کمشنرز نے منظوری دی تھی. اجلاس میں بتایا گیا کہ ایک ارب 58کروڑ45لاکھ روپے کی لاگت کے اس پروگرام کے تحت ساہیوال کے 445سکولوں میں 790اضافی کمرے تعمیر کئے جارہے ہیں جن میں بچوں کی تعداد زیادہ ہے -ان میں ضلع ساہیوال کے 139سکولوں میں 227کمرے ،ضلع اوکاڑہ کے 152سکولو ںمیں 288کمرے اور ضلع پاکپتن کے 154سکولوں میں 275کمرے شامل ہیں ا ور اس منصوبے پر 70فیصد کام مکمل کر لیا گیا ہے۔کمشنر نے محکمہ بلڈنگ کے افسران کو ہدایت کی کہ تمام کام پر نہ صرف کوالٹی کو یقینی بنایا جائے بلکہ کام کی رفتار بھی تیز کی جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں