آئین اورقانون کی بالا دستی کے بغیر جمہوریت کا تصور ممکن نہیں:‌ندیم کامران

ساہیوال (بیورورپورٹ)صوبائی وزیر پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ملک ندیم کامران نے کہا ہے کہ ملک میں آئین اور قانون کی بالادستی کے بغیر جمہوریت مضبوط نہیں ہو سکتی ہمیں چاہیے کہ ملک کو بین الاقوامی برادری میں باوقار مقام دلانے کے لئے قانون کی بالادستی کو یقینی بنائیں جس میں وکلاء کا کردار انتہائی اہم ہے۔حکومت وکلاء کو در پیش مسائل حل کرنے کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھا رہی ہے اور ساہیوال بار میں جدید لائبریری کا قیام اسی سمت میں ایک اہم قدم ہے۔وہ یہاں ڈسٹرکٹ بار روم میں لائبریری کی افتتاحی تقریب سے خطاب کررہے تھے جو 30لاکھ کی گرانٹ سے مکمل کی گئی۔اس موقع پر مسلم لیگ ن کے ضلعی جنرل سیکرٹری راؤ نذر فریدایڈوکیٹ،ڈسٹرکٹ بار کے صدر چوہدری محمد انور اور جنرل سیکرٹری چوہدری عثمان علی اور چیئر مین پی ایچ اے حاجی احسان الحق ادریس کے علاوہ وکلا ء کی بڑی تعداد بھی موجود تھی۔انہوں نے کہا کہ ملک میں جمہوریت کی بحالی اور آمریت کے خلاف جدوجہد میں وکلاء نے ہمیشہ ہر اول دستے کا کردار ادا کیا جس پر ملک کی تمام جمہوریت پسند قوتیں ہمیشہ فخر کر تی رہیں گی۔انہو ں نے بار کی لائبریری کے لئے مزید 10لاکھ روپے گرانٹ کابھی اعلان کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے راؤ نذر فرید ایڈوکیٹ نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ساہیوال کے وکلاء کے لئے نئے چیمبر زکی تعمیر کرائے جائیں اور وکلاء کالونی کے قیام کا وعدہ بھی پورا کیا جائے جس پر صوبائی وزیر نے کہا کہ ڈسٹرکٹ بار کے وفد کی بہت جلد وزیر اعلی سے ملاقات کرائی جائے گی تا کہ ان مطالبات پر جلد عملدر آمد کو یقینی بنایا جاسکے۔تقریب سے بارکے صدر چوہدری محمد انور اور چیئر مین پی ایچ اے حاجی احسان الحق ادریس نے بھی خطاب کیا اور وکلاء کو در پیش مسائل کی نشاندہی کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں