قدرتی آفات کے نقصانات کو کم کرنے کے لیے کوشاں ہیں: ڈی سی ساہیوال

ساہیوال (بیورورپورٹ)ڈپٹی کمشنر شوکت علی کھچی نے کہا ہے کہ قدرتی آفات میں جانی ومالی نقصان سے بچنے کیلئے معاشرے کے ہر فرد کو بنیادی حفاظتی اقدامات سے آگہی رکھنی چاہیے تا کہ امداد پہنچنے سے پہلے ہی فور ی طور پر بچاؤ کے اقدامات کر سکیں۔حکومت عوام کو ان قدرتی آفات خصوصی آگ،ٹریفک حادثات،سیلاب اور زلزلے سے نقصان کو کم کرنے کی تربیت فراہم کر رہی ہے جن سے تمام افراد کو استفادہ کرنا چاہیے۔انہوں نے یہ بات آفات سے آگہی کے قومی دن کے موقع پر ہونے والی ایک واک کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہی جو میونسپل کارپوریشن کے دفاتر سے شروع ہو کر صدر چوک،ٹینکی چوک اور مشن چوک سے ہوتی ہوئی ریسکیو 1122کے دفاتر پر ختم ہوئی۔واک میں اے ڈی سی ریونیو قدیر احمد باجوہ اور ڈپٹی میئر ساجد نعیم ہیپی کے علاوہ ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ریسکیو 1122،ضلعی و میونسپل افسران اور شہریوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔یہ دن 8اکتوبر 2005کو شمالی علاقوں میں آنے والے تباہ کن زلزلے کی یاد میں منایا جاتا ہے جس میں 60ہزار سے زائد قیمتی جانیں ضائع ہو ئیں۔ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ قدرتی آفات ایک امر ربی ہے لیکن ان سے ہونے والے نقصانات کو حفاظتی تدابیر اپنا کر کم کیا جا سکتا ہے۔انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ وہ ایمرجنسی سے نمٹنے کیلئے بنیادی تربیت حاصل کریں تا کہ ایمرجنسی کو ڈیل کرنے والے اداروں پر بوجھ کم ہو سکے۔واک سے پہلے زلزلہ کے شہداء کی مغفرت کیلئے خصوصی دعا بھی کی گئی بعد میں ریسکیو 1122،فائر بریگیڈ اور ایمبولنس سروسز کی گاڑیوں نے شہر کی مختلف اہم شاہراہوں پر فلیگ مارچ کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں