انتخابی اصطلاحات کا بل سینیٹ سے بھی منظور

اسلام آباد: قومی اسمبلی کے بعد سینیٹ نے بھی انتخابی اصلاحات کا بل بھی منظور کروا لیا ہے۔ اس بل میں شامل ایک شق کے تحت سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کے لیے پارٹی صدر بننے کی راہ ہموار ہو سکتی ہے۔آج منظور ہونے والے انتخابی اصلاحات کے بل کی شق نمبر 203 میں یہ کہا گیا ہے کہ کوئی بھی شخص جو سرکاری ملازم نہ ہو وہ نہ صرف سیاسی جماعت میں شمولیت اختیار کر سکتا ہے بلکہ اس کا صدر بھی بن سکتا ہے۔اس شق میں عدالتوں کی طرف سے نااہل قرار دیا جانے والے کسی فرد پر پارٹی سربراہی کی پابندی عائد نہیں کی گئی۔
قبل ازیں مشرف دور میں پولیٹیکل پارٹی آرڈر 2002 میںقومی اسمبلی کی رکنیت کے لیے نااہل افراد پر پارٹی عہدوں کے حصول کی پابندی عائد کی گئی تھی۔سینیٹ میں قائد حزب اختلاف چوہدری اعتزاز احسن نے اس شق میں تبدیلی کے لیے ایوان میں ایک ترمیم پیش کی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ پولیٹیکل پارٹی آرڈر 2002 کوبرقرار رکھنے کی استدعا کی گئی تھی۔ ترمیم پر رائے شماری کروائی گئی تو حزب مخالف کی جماعتوں کو جنہیں سینیٹ میں اکثریت حاصل ہے ایک ووٹ سے شکست ہوئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں