بربریت ، ہجوم محنت کش کو مار کر، لاش کے سامنے کھانا کھاتا رہا

پتوکی(ایس این این) پتو کی میں سفاکیت اور بربریت کی ایک نئی تاریخ رقم کر دی گئی. شادی ہال میں پاپڑ بیچنے والے پر ہجوم کا مبینہ تشدد، محنت کش جاں بحق. محنت کش کو مار کر اس کی لاش ہال میں فرش پر چھوڑ دی گئی. ہجوم لاش کے سامانے کھانا کھاتا رہا .ذرائع کے مطابق پاپڑ بیچنے والے ایک محنت کش کو جیب کترنے کا الزام لگا کر مشتعل ہجوم نے تشدد کا نشانہ بنایا. پڑھے لکھے لوگ بے حسی سے یہ تماشا دیکھتے رہے اور محنت کش ہجوم کے ہاتھوں موت کے منہ میں چلا گیا.بے حسی اور بربریت کی انتہا یہ ہے کہ مجمعے نے اس محنت کش کی لاش کو فرش پر پڑا رہنے دیا اور لوگ شادی کا کھانا کھانے میں مصروف رہے. حکومت پنجاب نے اس واقعے کا نوٹس لے لیا ہے اور وزیر اعلیٰ نے متعلقہ حکام کو رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں