ساہیوال کے پیشہ ور نعت خواں نے شہری کو لاکھوں کا چونا لگا دیا

ساہیوال(ایس این این) ساہیوال کے پیشہ ور نعت خوان نے فیصل آباد کے رہائشی کو سو الاکھ روپے سے زائد کا چونا لگا دیا۔ قاری شاہد محمود کا رقم وقت پر ادا نہ کرنے پر محفل نعت میں نعت پڑھنے سے انکار۔ایڈوانس کی رقم دی ہے جب تک باقی پیسے نہیں بھیجیں گے محفل میں نہیں آؤں گا۔ بقیہ رقم ادا کرنے کے باوجود قاری شاہد محمود نے محفل نعت میں آنے سے انکار کر دیا۔ تفصیل کے مطابق ساہیوال سے تعلق رکھنے والے پروفیشنل نعت خواں قاری شاہد محمود نے یاسر علی سکنہ گھوکھووال فیصل آباد کی دعوت پر محفل نعت میں آنے کی حامی بھری۔ محفل میں شرکت کا معاوضہ ڈیڑھ لاکھ روپے طے ہوا۔ یاسر علی کے مطابق اس نے 30 ہزار روپے بطورایڈوانس قاری شاہد محمود کے اکاؤنٹ میں جمع کروائے اور محفل کی تیاریاں شروع کر دیں۔ مقررہ دن قاری شاہد محمود محفل میں نہ آیا تو اس نے قاری شاہد سے رابطہ کیا تو اسے کہا گیا کہ بقیہ رقم ادا کرو گے تو محفل میں آؤںگا۔ جس پر قاری شاہد کے سیکرٹری کو مبلغ ایک لاکھ روپے ادا کیے گئے پھر بھی قاری شاہد محفل میں نہ آیا اور ادا شدہ رقم کی واپسی میں بھی لیت و لعل سے کام لینے لگا۔ یاسر علی نے تھانہ ملت ٹاؤن فیصل آباد میں قاری شاہد محمود کے خلاف نوسربازی اور وعدہ خلافی کی درخواست جمع کروا دی ہے۔یہاں ایک لمحہ فکریہ ہے کہ پاکستان بھر میں نعت خوانی ایک پیشہ بن چکا ہے. اکثر نقییب محفل اور نعت خوان نعت اور اس کے تقدس کو پامال کرنے میں حد سے گزر رہے ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں