سیالکوٹ، توہین مذہب کا الزام، سری لنکن مینجر قتل

سیالکوٹ(ایس این این) سیالکوٹ میں نجی فیکٹری کا سری لنکن منیجر فیکٹری ملازمین کے تشدد سے ہلاک ہوگیا، مشتعل افراد نے لاش کو سڑک پر گھسیٹا اور آگ لگا دی۔مشتعل افراد کا دعویٰ ہے کہ مقتول پریانتھا دیاوادانا نے مبینہ طور پر مذہبی جذبات مجروح کیے تھے، مشتعل افراد نے فیکٹری میں توڑ پھوڑ بھی کی۔پولیس کا کہنا ہے کہ ابتدائی اطلاعات کے مطابق ہجوم نے پریانتھا دیاوادانا کو فیکٹری کے اندر ہی تشدد کا نشانہ بنانا شروع کر دیا تھا۔ڈی پی او کا کہنا ہے کہ غیرملکی منیجر کی ہلاکت کے واقعے کی تحقیقات کی جارہی ہے۔وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے انسپکٹر جنرل پولیس سے رپورٹ طلب کرلی۔عثمان بزدار نے کہا کہ کسی کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں