ساہیوال، مرد جج سکولوں میں، خواتین ججز پر دباؤ، سائل خوار

ساہیوال(بیورورپورٹ)میل ججز کی سکولوں کی چیکنگ پر ڈیوٹی لگانے سے فی میل ججز پرکیسوں کا دبا ؤ بڑھ گیا ،دباؤ بڑھنے کے باعث بیشتر سائلین کو تواریخ پر ٹرخایا جانے لگا ۔سی ای او،ڈی ای اواورایجوکیشن موجود ہیں ان کے ساتھ ساتھ آرمی مانیٹر نگ میل کے ایم ایز بھی روزانہ کی بنیاد پر سکولوں کی چیکنگ کر رہے ہیں عدلیہ کے پاس پہلے ہی ججز کی کمی ہونے کے باعث ہزاروں کیس زیر التوا ہیں اور کئی کئی سال تک سائل عدالتوں کے دھکے کھانے پر مجبور ہیں عوام سوال کرتے ہیں کہ کیا ججز کی ڈیوٹیاں لگانے سے سکولوں میں تعلیمی میعار بہتر ہو جائے گا۔ چیف جسٹس آف پاکستان کو ججز کی قدر و منزلت کے پیش نظر سکولوں سے نکال کر انصاف کی کرسی پر بیٹھا نا چاہیے تاکہ عوام کو فوری انصاف مہیا ہو سکے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں