ساہیوال، میونسپل کارپوریشن کے عملے پر حملہ، سابق مئیر کے خلاف مقدمہ

ساہیوال(ایس این این)پولیس غلہ منڈی نے میٹرو پولٹین کارپوریشن کے سابق مئیر کے 13 کارندوں کے خلاف میٹرو پولٹین کارپوریشن کے چار اہل کاروں پر تشدد انکے موبائل چھیننے ،کار سر کار میں مدا خلت کے الزامات میںمقدمہ درج کر لیا ہے۔ملزموں کی گرفتاری نہ ہونے کی وجہ سے میٹرو پولٹین کارپوریشن کے ملازمین نے ہڑ تال کی دھمکی دے دی۔تفصیلات کے مطابق 12ستمبر کو2بجے میٹرو پولٹین کارپوریشن کا سٹاف پاکپتن روڈ نزد جی سی یونیورسٹی کیمپس پر صفائی اور تجاوزات مسمار کر رہا تھا تو رزاق بلوچ،سجاول بلوچ ،امتیاز،نواز بلوچ ،سانول نے دیگر 8دیگر ساتھیوں کے ہمراہ دھاوا بول دیا اور کار سر کار میں مدا خلت کر تے ہوئے چار ملازمین حمزہ ،شہباز مسیح ،سنی عنایت اور شہزاد مسیح کو اغوا کی کوشش کی اور چاروں پر تشدد کر کے انہیں بری طرح زخمی کر دیا.سر کاری گاڑیوں کی توڑ پھوڑ کی ۔پولیس کے آجانے کے بعد حملہ آورفرار ہو گئے۔پولیس غلہ منڈی نے چیف سینٹری انسپکٹر محمد ریاض کی مد عیت میں مقدمہ 149,148,337,427,506,379,186ت پ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہیجبکہ میٹرو پولٹین کارپوریشن کے ملازمین نے چوبیس گھنٹے کے اندر ملزموں کی گرفتاری نہ ہونے کی صورت میں ہڑتال کی دھمکی دے دی ہے ۔ریجنل پولیس آفیسر طارق عباس قریشی نے ملزموں کی گرفتاری کا حکم دے دیا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں