ساہیوال، ٹریفک جام کا مسئلہ شدت اختیار کر گیا، شہری پریشان

ساہیوال(بیورورپورٹ)اوور ہیڈ‌برج پرٹریفک جام رہنا معمول بن گیا‘شہری گھنٹوں ٹریفک جام سے پریشان‘ اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کامطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق اوور ہیڈ‌برج ساہیوال پر دوپہر اور شام کے وقت ٹریفک اکثر جام رہتا ہے. گزشتہ ہفتے کے دوران مغرب کے وقت کئی بار ٹریفک جام کی وجہ سے اوور ہیڈ برج نصف گھنٹہ اور ایک گھنٹہ کے لیے بند رہا. ساہیوال اوور ہیڈ برج کے آس پاس دوپہر کے بعد کوئی ٹریفک اہل کار نہیں‌ہوتا. تمام اہل کار بسوں کے ڈرائیورز اور ٹریکٹر ٹرالیوں کے ڈرائیورز کے چالان کرنے میں مصروف ہوتے ہیں اس بنا پر شہر بھر میں ٹریفک بے ہنگم انداز میں چلتی ہے. جس سے ہائی سٹریٹ‘ جوگی چوک‘سکینڈ اوو ر ہیڈ برج‘باہر والا اڈا پر بعض اوقات گھنٹوں ٹریفک جام رہتی ہے جس کے باعث شہری شدید پریشان ہوتے ہیں۔مختلف حلقوں کا کہناہے کہ شہر میں بڑھتی ہوئی آبادی کے پیش نظر ٹریفک میں اضافہ ہواہے جس کے باعث شہر کی مین شاہراؤں پر ٹریفک گھٹنوں جام رہتی ہے اور ٹریفک کو رواں دواں رکھنے کیلئے ٹریفک پولیس کے پاس کوئی پلان نہیں ہے۔ انہوں نے کہاکہ ہائی سٹریٹ پر سکول وکالجز کی چھٹی کے وقت رش بڑھ جاتاہے اورٹریفک پولیس کا عملہ مذکورہ ٹائم عدم دلچسپی کا مظاہر ہ کرتاہے اور شہریوں کوشدید مشکلات کاسامناکرناپڑتاہے۔ انہوں نے کہاکہ ہائی سٹر یٹ پر جگہ جگہ موٹرسائیکل رکشوں کے اسٹینڈ ز بھی ٹریفک میں رکاوٹ کے باعث بن رہے ہیں۔ دوسری جانب اوور ہیڈ برج کے پاس لگے ٹریفک سگنل پر ہمہ وقت بسیں اور گاڑیاں سواریاں بٹھانے میں مصروف رہتی ہیں جب کہ پولیس اہل کار بس ہاکروں کے پلے سے چائے پینے میں مصروف ہوتے ہیں. ذرائع کے مطابق پولیس اہل کار بسوں میں اپنی سواریاں بغیر کرایہ کے بٹھاتے ہیں جس بنا پر ان بسوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی جاتی. عوامی وسماجی حلقوں نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر سے فوری نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں