ساہیوال، کشمیریوں سے یکجہتی، سرکاری سطح پر ریلیوں کا انعقاد

ساہیوال(بیورورپورٹ)ضلعی انتظامیہ وپولیس کی جانب سے جوگی چوک میں یوم یکجہتی کشمیر کے سلسلے میں ایک بڑی ریلی نکالی گئی جس میں کمشنرساہیوال ڈویژن ندیم الرحمن،آر پی او ہمایوں بشیر تارڑ، ڈی سی محمد زمان وٹو ،ڈی پی او محمد علی ضیاء،ایڈیشنل کمشنر ایس ڈی خالد ،اے ایس پی ڈاکٹرانعم فریال ،ڈی ایس پی ٹریفک پیر ریاض احمد ،ڈائریکٹر لائیو سٹاک ڈاکٹر غلام مصفطیٰ،ایڈیشنل ڈائریکٹر ڈاکٹر ثمرین کوثر ،ڈائریکٹر آرٹس کونسل ڈاکٹر ریاض ہمدانی ،سی ای او ایجوکیشن سجاد اسلم ،سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر اظہر نقوی،ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر سید علمدار بخاری اور ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر خالد عبداللہ کے علاوہ یونیورسٹی آف ساہیوال کے ہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ ڈاکٹر شہیرہ امین اور ڈاکٹرمحمد نعیم ،فکیلٹی ممبران اور طلباء و طالبات نے بھی شرکت کی جبکہ اس موقع پر سینکڑوں کی تعداد میں سرکاری ملازمین ،وکلا ،صحافی برادری ،اساتذہ ،طلبا ء و طالبات ،سول سوسائٹی کے اراکین ،تحریک انصاف کے کارکنان اور شہریوں بھی موجود تھے۔شرکاء نے بینرز اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی اور ان کی جدوجہد آزادی کے ساتھ بھرپور تعاون کے نعرے درج تھے ۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ پاکستان کا بچہ بچہ کشمیری عوام پر ہونیوالے ظلم و ستم پر رنجیدہ ہے اور اقوام عالم سے پُرزور مطالبہ کرتا ہے کہ 80 لاکھ کشمیریوں سے کیا گیا وعدہ پورا کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ دنیا میں کوئی ملک جبر سے حکومت نہیں چلا سکتا اور وہ وقت دور نہیں جب کشمیری بھی غلامی کی زنجیروں سے آزاد ہوں گے۔یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر مسیحی برادری نے بھی بھر پور شرکت کی۔اس کے علاوہ ڈی پی او آفس میں ایس پی ایویسٹی گیشن شاہدہ نورین اور پولیس لائن میں ڈی ایس پی ہیڈکوارٹر سلیم خان رتھ نے پرچم کشائی کی جبکہ ریلی میں 250 سے زائد پولیس ملازمین بھی شریک ہوئے اور ضلع کے تمام تھانوں میں بھی یوم یکجہتی کشمیر منایا گیا۔ریلی کا آغاز ٹھیک12 بجے پاکستان کے قومی ترانے سے ہوا جس کے بعد آزاد کشمیر کا قومی ترانہ بجایا گیا اور 5 منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی۔ریلی کے شرکا ء نے پاکستان اور آزاد کشمیر کے پرچم بھی اٹھا رکھے تھے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں