ڈی پی ایس ساہیوال کے اساتذہ کی تنخواہوں میں اضافے کی منظوری

ساہیوال (ایس این این ) کمشنر ساہیوال ڈویژن ندیم الرحمٰن نے کہا ہے کہ حکومت تعلیم اور صحت کی بہتر سہولیا ت کی فراہمی کے لئے پر عزم ہے اور وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے وژن کے مطابق ان دونو ں شعبوں میں نجی شعبے اور مخیرحضرات کا تعاون تعلیمی شعبے کی بہتری میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔ اُنہوں نے یہ بات ساہیوال ایجوکیشنل ٹرسٹ کے بورڈ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی جس میں ڈپٹی کمشنر پاکپتن احمد کمال مان ، ایڈیشنل کمشنر ایس ڈی خالد، پرنسپل برگیڈیئر (ر) سیدانوارلحسن کرمانی اور دوسرے ممبران نے بھی شرکت کی۔ا جلا س میں ساہیوال اور چیچہ وطنی کے سکولوں کے سالانہ بجٹ کی بھی منظوری دینے کے علاوہ اور وفاقی حکومت کے فیصلے کے مطابق ملازمین کی تنخواہوں میں 10فیصد اور 5فیصد اضافے کی بھی منظوری اوراپریل 2020ء سے فیسوں میں 5فیصد اور ٹرانسپورٹ کے کرایوں میں 300روپے اضافے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔ اجلا س میں پرنسپل برگیڈیئر (ر) سیدانوارلحسن کرمانی نے بتایا کہ ساہیوال میں نئے راوی کیمپس کے لئے 10کروڑ روپے اور واٹر ٹینک کی تعمیر کے لئے 1کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں جبکہ کرکٹ گراؤنڈ میں ضروری سہولیا ت کی فراہمی بھی ممکن بنائی جائے گی۔اس کے علاوہ چیچہ وطنی کیمپس میں گرلز بلاک کے فرسٹ فلور کی تعمیر کے لئے 2کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں جس سے 12کلاس رومز تعمیر کئے جائیں گے۔ کمشنر ندیم الرحمٰن نے دونو ں سکولوں کی نصابی اور ھم نصابی کامیابیوں کو سراہا اوراس بات کااعادہ کیا کہ ان سکولوں کے تعلیمی معیار کو برقرار رکھنے میں تمام مسائل بروے کار لئے جائیں گے۔ اجلاس میں عارف والا اور پاکپتن کے معاملات کو بہتر بنانے کے لئے 5روکنی کمیٹی قائم کی گئی ہے۔ کمشنرنے بورڈ اجلا س سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم معاشرے کی اصلاح میں اہم کردار ادا کرتی ہے اور بچوں کی کردار سازی میں معیاری سکولوں کی اہمیت کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بچوں میں چھپی ہوئی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے میں بھی اساتذہ کی ذمہ داریوں کو اہم قرار دیتے ہوئے انہیں دلجمعی سے اپنے فرائض ادا کرنے کی بھی تلقین کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں