ساہیوال،مستقل ہونے والے اساتذہ کی تنخواہ روکے جانے کا امکان

ساہیوال(ایس این این) اکاؤنٹس آفس اور محکمہ تعلیم کی ملی بھگت، 2014ء میں بھرتی ہونے والے ایجوکیٹرز کی مستقل تقرری کے باوجود تنخواہیں ریگولر نہ ہو سکیں۔ ضلع بھر کے سینکڑوں اساتذہ کی تنخواہیں تعطل کا شکار ہونے کا امکان۔ ذرائع کے مطابق 2014ء میں بھرتی ہونے والے اساتذہ کو امسال مستقل کیا گیا ہے تاہم ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر کی جانب سے تا حال اکاؤنٹس آفس کو ان کی مستقل تقرری کا نوٹیفکیشن نہیں بھیجا گیا جس بنا پر مذکورہ ایجوکیٹرز کو تنخواہوں کی ادائیگی روکی جا سکتی ہے۔ اساتذہ کے مطابق اپنی تنخواہیں ریگولر کروانے کے لیے انھوں نے جب اے جی آفس سے رابطہ کیا تو انھیں بتایا گیا کہ محکمہ تعلیم نے اے جی آفس کو ایسا کوئی مراسلہ جاری نہیں کیا جس کی روشنی میں متعلقہ ایجوکیٹرز کی تنخواہیں ریگولر کی جائیں۔ مذکورہ اساتذہ کا کہنا ہے کہ محکمہ تعلیم اور اے جی آفس کی ملی بھگت سے ان کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے ہونے کا خدشہ ہے کیوں کہ ان کی عارضی ملازمت کا دورانیہ ختم ہو چکا ہے۔ اے جی آفس کے کلرک تنخواہیں ریگولر کرنے کے لیے رشوت طلب کر رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں