زرداری اور فریال تالپور نے مکمل اثاثے ظاہر نہیں کیے: شہزاد اکبر

اسلام آباد(ایس این این ) وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ 26 ممالک میں 1100 ارب ڈالر کی نشاندہی ہوئی ہے۔ جو لوگ رقوم کی غیر قانونی ترسیل یا رقم منتقلی میں ملوث ہیں ا نہیں مروجہ قوانین کا سامنا کرنا ہو گا ۔پیپلز پارٹی اب 90 ارب ڈالر کی منی لانڈرنگ کے حوالے سے اٹھنے والے سوالات کا جواب دے ۔ ٹی وی انٹرویو کے دوران ان کا کہنا تھا کہ آصف علی زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کو جے آئی ٹی رپورٹ میں اٹھائے گئے سوا لات کے جواب دینے چاہئیں۔ زرداری کو اپنی پارٹی کا تشخص بہتر کرنے کے لئے ان سوالات کا جواب دینا چاہیے کیونکہ ان کی پارٹی نے ملک میں جمہوریت کے فروغ کے لئے کردار ادا کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ زرداری اور فریال تالپور نے اپنے مکمل اثاثے ظاہر نہیں کئے ۔ بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہا کہ جے آئی ٹی رپورٹ میں پارک لین کمپنی نے بلاول بھٹو کے نام کی بھی نشاندہی کی ہے جو 2008ءمیں کمپنی کے ڈائریکٹر تھے۔ دیگر ممالک میں چھپائے گئے اثاثہ جات اور رقوم کے حوالے سے ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ 26 مختلف ممالک میں 1100 ارب ڈالر کی نشاندہی ہوئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں