این اے 131 کے نتیجے کا نوٹفیکشن جاری نہ کیا جائے؛ لاہور ہائیکورٹ

لاہور(ایس این این ) لاہور کے حلقہ این اے 131 سے ہارنے والے امیدوار سابق وفاقی وزیر سعدرفیق نے ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے حوالے سے ہائی کورٹ میں درخواست دائر کررکھی تھی جس پر آج فیصلہ سنادیا گیا۔جسٹس مامون الرشید نے درخواست پر سماعت کی تو سعد رفیق کے وکیل نے ووٹوں کی دوبارہ گنتی کرنے کی استدعا کرتے ہوئے کہا کہ آر او نے صرف مسترد شدہ ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی جس سے کامیاب امیدوار کی برتری 602 رہ گئی تاہم مکمل ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے حوالے سے ریٹرنگ افسر نے ہماری درخواست مسترد کردی لہذا عدالت دوبارہ ووٹوں کی گنتی کا حکم دے۔
عمران خان کے وکیل بابر اعوان نے دوبارہ ووٹوں کی گنتی کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ آر او کی جانب سے مسترد شدہ ووٹوں کی گنتی کے باوجود عمران خان کامیاب قرار پائے اس لیےدوبارہ گنتی کی ضرورت نہیں۔عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد ووٹوں کی دوبارہ گنتی کا حکم دیتے ہوئے الیکشن کمیشن کو عمران خان کی کامیابی کا نوٹی فکیشن جاری کرنے سے روک دیا ہے۔دریں اثنا عمران خان نے لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے لیے انہوں ںے بابر اعوان کو ہدایات جاری کردی ہیں۔ ڈاکٹر بابر اعوان فیصلے کو فوری طور پر چیلنج کریں گے جس کے لیے انہوں نے تیاری شروع کردی۔جب بابر اعوان سے پوچھا گیا کہ عمران خان نے تو کسی بھی حلقہ کو کھولنے کا اعلان کیا تھا تو بار اعوان نے اس سوال کا جواب دینے سے انکار کردیا اور کہا کہ ہم صرف اس حلقے پر اپیل کر رہے ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں