چیچہ وطنی، پولنگ عملے سے ہیڈ‌ماسٹر رانا عابد اورسیکیورٹی اہلکاروں کی بدتمیزی

ساہیوال(ایس این این) پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 201میں الیکشن ڈیوٹی کرنے والے اساتذہ سے عدالتی عملے اور سیکیورٹی اہلکاروں کی بد تمیزی، رزلٹ جمع کرواتے ہوئے دھکے دئیے گئے۔ اساتذہ ساری رات خوار ہوتے رہے،رات فرش پر بسر کی۔ آئندہ ڈیوٹی نہیں دیں گے۔ ذرائع کے مطابق 25جولائی کو پی پی 201کے پریذائیڈنگ افسران سارا دن شدید گرمی میں ڈیوٹی دینے کے باجود لائنوں میں لگے رہے۔ عدالت کے دروازوں پر تعینات سیکیورٹی عملہ پریذائیڈنگ افسران سے بد تمیزی کرتا رہا۔ بعض سینئیر اساتذہ کو دھکے بھی دئیے گئے۔ رضوان نامی سیکیورٹی اہلکار خواتین اساتذہ کو بھی دھمکاتا رہا۔ حلقہ کے آر او کی عدالت میں تعینات ہیڈ ماسٹر رانا عابد بھی جاننے والوں کو پروٹو کول دیتا رہا جب کہ دیگر اساتذہ کو دھمکایا جاتا رہا۔اساتذہ کے مطابق عدالت میں تعینات ہیڈ ماسٹر رانا عابد نے الیکشن ٹریننگ کے دوران جو ہدایات دی تھیں ان کے مطابق رزلٹ تیار کیا گیا مگر عدالت میں فرائض ملنے پر رانا عابد اپنی اوقات سے باہر ہو گیا اور گورنمنٹ کالج ساہیوال کے کئی اساتذہ کو ڈانٹتا رہا۔ پریذائیڈنگ افسران کی لائن کے باوجود عدالتی عملہ اپنے جاننے والے افسران کو بغلی دروازے سے اندر بلا کر رزلٹ جمع کرتا رہا۔ اساتذہ نے آر او مجیب الرحمان شامی کے رویے پر بھی تنقید کی جنھوں نے سامان دیتے وقت کہا تھا کہ سب باز آجائیں ورنہ میں سارے ٹیچرز کو ٹھیک کر دوں گا۔ یاد رہے 2013کے الیکشن میں بھی ایک آر او نے چیچہ وطنی کے ایک لیکچرر کو تھپڑ مارا تھا جس پر اساتذہ تنظیموں نے احتجاج کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں