ساہیوال،ممتاز قادری کو سزائے موت سنانے والا جج ذلیل ہو گا: خادم رضوی

ساہیوال (بیورورپورٹ)تحریک لبیک یارسول اللہ کے مرکزی امیر علامہ خادم حسین رضوی نے کہاہے کہ میاں نوازشریف پاکستان یا لندن جہاں بھی جائے گا روئے گا اس نے میرے نبی ؐ کی نبوت پر شک کیا ہے۔ مسلم لیگ ن‘پیپلزپارٹی اور تحریک انصاف سمیت ختم نبوت بل پر جس جس نے بھی دستخط کئے تھے ان سب نے ہٹ دھرمی کا ثبوت دیا. انہوں نے استعفے نہیں دیئے حکم تو واپس لے لیا گیا لیکن اپنی غلطی پر نادم نہیں ہوئے۔ وہ یہاں ہاکی سٹیڈیم میں بہت بڑے اجتماع سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر تحریک لبیک یارسول اللہ کے قومی و صوبائی اسمبلیوں کے امیدوار میاں خالد صدیق کامیانہ‘رائے منصف کھرل‘ رانا تنویراحمد‘شہزاد خان‘چوہدری طاہر باڈی ودیگر کے علاوہ ہزاروں افراد موجود تھے۔انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی کے بلاول بھٹو زرداری اپنی انتخابی مہم کے دوران جب لیاری پہنچے تو وہاں کے عوام نے ان پر پتھر برسائے۔ اللہ کا شکر ہے کہ میں جہاں بھی جاتاہوں لوگ میری گاڑی کے ٹائر چومتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ غازی علم دین شہید کے بعد ختم نبوت کے معاملے پر اگر کوئی شخص حق پر ڈٹا ہے تو وہ خادم رضوی ہے۔اسلام آباد دھرنا میں 12ہزار شیل ختم نبوت کی خاطر برداشت کئے اور اس موقع پر 7 افراد شہید ہوئے جن کے میں نے جنازے کرائے۔اس موقع پر ایک شہیدنوجوان کے والد نے مجھے کہاکہ میں بھی اپنی جان شہادت کیلئے پیش کرنا چاہتاہوں اور آپ کو اکیلے نہیں چھوڑنا چاہتا۔ انہوں نے کہاکہ غازی ممتاز قادری شہید کو جس جج نے سزائے موت کا حکم سنایا تھا وہ جج دنیا و آخرت میں بھی ذلیل ہو گا۔انہوں نے کہاکہ اگرمیں معذور نہ ہوتا تو انتخابی مہم میں لوگو ں کے پاس سینہ تان کر ووٹ مانگنے جاتا۔انہوں نے عوام سے پرزوراپیل کی کہ وہ تحریک لبیک یارسول اللہ کے امیدواروں کو ووٹ دیکر کامیاب کرائیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں