فوج کسی کی غلطی معاف نہیں کرتی: آئی ایس پی آر

راولپنڈی(ایس این این ) آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ پاک فوج میں آج تک کسی کو غلطی پر معاف نہیں کیا گیا خواہ وہ سپاہی ہو یا جنرل ہو،اسد درانی نے این او سی لئے بغیر کتاب لکھی ،ادارے نے خود نوٹس لیا اور انکوائری شروع کی ،جلد فیصلہ بھی آئے گا ،جو قوم کو بتایا جائےگا ۔میجر جنرل آصف غفور نے راولپنڈی میں پریس کانفرنس کے دوران پاکستان کے اندرونی چیلنجز، فاٹاکے انضمام، پی ٹی ایم، سوشل میڈیا پر پاکستان مخالف سرگرمیوں،عام انتخابات2018ء ،بھارتی جارحیت، افغانستان،ایران صورتحال اور امریکا کی افغانستان سے واپسی جیسے امور پر بات چیت کی۔ان کا کہناتھاکہ 2018ء الیکشن کا سال ہے،تبدیلی کا سال ہے،سیاسی جماعتیں ایک دوسرے کے مقابلے پر ہیں،حکومت نے اپنا وقت پورا کیا ،ہم سے زیادہ کسی کو خوشی نہیں۔
میجر جنرل آصف غفورنے کہا کہ عوام کی محبت فوج کیلئے پچھلے 10 سال میں زیادہ ہوئی ہے، کم نہیں ہوئی،الزام لگانے سے ہم پر فرق نہیں پڑتا،ہم پاکستان کی جنگ لڑرہےہیں،ہر چیز کا جواب نہیں دے سکتے ،ہم ہر وہ کام کریں گے جو پاکستان کے مفاد میں ہوگا،ہم پاکستان کے لئے سب کچھ برداشت کریں گے لیکن جب ملک کے نقصان پہنچانے کی بات ہوگی تو کچھ برداشت نہیں کریں گے،ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے،بھارت نے 13 سال میں 2 ہزار سے زائد بار جنگ بندی کی خلاف ورزی کی ہے، پاکستان نے ذمےداری کا مظاہرہ کیا۔
جنرل آصف غفور نے یہ بھی کہا کہ بھارت کی طرف سے 2018 ءمیں 1ہزار77سیز فائر خلاف ورزیاں ہوچکی ہیں ،بھارتی میڈیا نے انہیں پاکستان کی جانب سے خلاف ورزی قرار دیا ،سارک ممالک کے صحافیوں سے گفتگو ہوئی،جن میں 4 بھارتی بھی تھے۔انہوں نے مزید کہا کہ بھارت ہم پر فائرنگ کرتا ہے تو ہم جواب نہیں دیتے لیکن جب وہ عام شہری کو نشانہ بناتا ہے تو جواب دیتے ہیں،بھارت کی جانب سے پہلی گولی آنے سے کوئی نقصان نہیں ہوتا تو جواب نہیں دیں گے اگر دوسری گولی آتی ہے تو پھر بھرپور جواب دیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں